19 April 2024

Homeتازہ ترینامریکی ڈالر مزید سستا

امریکی ڈالر مزید سستا

dollar rate in pakistan today 18/1/2024

امریکی ڈالر مزید سستا

کراچی :(سنونیوز)انٹربینک میں ڈالر سستا۔انٹربینک میں ڈالر 16 پیسے کمی سے بند ہوا۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق انٹربینک میں ڈالر 282 روپے 37 پیسے پر بند ہوا۔دوسری جانب سال 2023 میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں کے سارے ریکارڈ ٹوٹ گئے، شہری ملکی تاریخ کا سب سے مہنگا پیٹرول اورڈیزل خریدنے پر مجبور رہے۔

سال 2023 میں ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں کمی آتی رہی، آئی ایم ایف شرائط کے تحت لیوی میں اضافے اور عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمتیں بڑھنا پاکستان میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی وجوہات بنیں۔

اس سال پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 116 روپے 58 پیسے تک اضافہ ہوا جبکہ پیٹرولیم مصنوعات پر لیوی میں فی لیٹر 30 روپے تک اضافہ کیا گیا۔ ڈیزل 30 اور پیٹرول پر فی لیٹر لیوی میں 10 روپے کا اضافہ کیا گیا، اس وقت ڈیزل اورپیٹرول کے فی لیٹر پر60، 60 روپے کے حساب سے لیوی عائد ہے۔

یہ بھی پڑھیں

پیٹرول کی قیمت میں معمولی کمی کا امکان

پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں اس سال 16 ستمبر کو نگران حکومت میں ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح پر جاپہنچی تھیں جب فی لیٹر پیٹرول کی قیمت سب سے زیادہ 331 روپے 38 پیسے اور فی لیٹر ڈیزل کی قیمت سب سے زیادہ 329 روپے 18 پیسے ہوگئی تھی۔

تاہم یکم اکتوبر 2023 سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کا رجحان شروع ہوا جس کے نتیجے میں حالیہ 3 ماہ میں فی لیٹر پیٹرول 64 روپے 4 پیسے اور ڈیزل 52 روپے 99 پیسے سستا ہوا۔

اس سال کےآغاز پر فی لیٹر پیٹرول کی قیمت 214 روپے 80 پیسے اور فی لیٹر ڈیزل کی قیمت 227 روپے 80 پیسے تھی جبکہ سال 2023 کے اختتام پر فی لیٹر پیٹرول کی قیمت 267 روپے 34 پیسے اور ہائی اسپیڈ ڈیزل کی فی لیٹر قیمت 276 روپے 19 پیسے ہوگئی۔

اس وقت پیٹرول کے فی لیٹر میں لیوی-مارجن-ڈیوٹیز-ٹیکس97 روپے 8 پیسے جبکہ ڈیزل کے فی لیٹر قیمت میں لیوی-مارجن-ڈیوٹیز اور ٹیکس کا حصہ 97 روپے 4 پیسے بنتا ہے۔

سال2023 کے آغاز پر ایک ڈالر 226 روپے کا تھا جو 22 دسمبر کو 282 روپے 53 پیسے کا ہوا تاہم اسی سال کے دوران ایک ڈالر 300 روپے سے اوپر بھی گیا۔

یہ بھی پڑھیں:

اسٹاک، کرنسی اور گولڈ مارکیٹ کا ہفتہ وار جائزہ

 

Share With:
Rate This Article