22 February 2024

Homeدنیاامریکہامریکا کا جدید ترین لڑاکا طیارہ لاپتہ

امریکا کا جدید ترین لڑاکا طیارہ لاپتہ

امریکا کا جدید ترین لڑاکا طیارہ لاپتہ

امریکا کا جدید ترین لڑاکا طیارہ لاپتہ

واشنگٹن: (سنو نیوز) امریکی فوج نے F-35 لڑاکا طیارے کی تلاش میں عوام سے مدد مانگی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ اس جیٹ کے پائلٹ نے ’ایجیکشن سیٹ‘ کا استعمال کرتے ہوئے طیارے سے چھلانگ لگا دی تھی۔تاہم طیارے کو زمین کھا گئی یا آسمان اس بارے بھی تک پتہ نہیں چلا سکا ہے۔

یہ طیارہ ہفتے کی شام اس وقت لاپتہ ہو گیا تھا جب پائلٹ جنوبی امریکی ریاست جنوبی کیرولینا کے اوپر پرواز کر رہا تھا۔ بتایا جاتا ہے کہ پائلٹ، جس کا نام ظاہر نہیں کیا گیا ہے، نے جہاز سے بحفاظت چھلانگ لگا دی تھی۔ اس کو طبی علاج کیلئے ہسپتال منتقل کیا گیا جہاںاس کی حالت مستحکم ہے۔

ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ طیارے کیساتھ کیا ہوا؟ لیکن حکام کا کہنا ہے کہ طیارے کو “مشکل” کا سامنا کرنا پڑا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ وہ چارلسٹن کے شمال میں دو جھیلوں کے ارد گرد تلاش کر رہے ہیں۔

غیر ملکی انٹیلی جنس سرویلنس ایکٹ کے ذریعے حاصل کردہ معلومات کو امریکی شہریوں کے بارے میں معلومات جمع کرنے کے لیے استعمال کرنے کی ان معاملات میں اجازت نہیں ہے جن کا تعلق قومی سلامتی سے ۔

چارلسٹن ہنٹنگ بیس نے X سوشل نیٹ ورک پر مدد کی درخواست پوسٹ کی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ “ایمرجنسی ریسپانس ٹیمیں اب بھی F-35 کو تلاش کرنے کی کوشش کر رہی ہیں۔عوام سے کہا گیاہے کہ وہ فوجی اور سویلین حکام کے ساتھ تعاون کریں۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ کسی کو بھی ایسی معلومات ہے جو تلاش کرنے والی ٹیموں کی مدد کر سکتی ہے اس سے کہا جاتا ہے کہ وہ آپریشن سینٹر سے رابطہ کرے۔خیال رہے کہ مارٹن لاک ہیڈ کے ذریعے بنائے گئے، اس جیٹ کی مالیت تقریباً 80 ملین ڈالر بتائی جاتی ہے اور یہ دنیا کے جدید ترین طیاروں میں سے ایک ہے۔

F-35 جیٹ دنیا میں اپنی نوعیت کا سب سے بڑا اور مہنگا ہتھیاروں کا پروگرام ہے۔ 2018 ء میں، جنوبی کیرولینا میں ایک حادثے کے بعد، امریکی فوج نے تمام F-35 جیٹ طیاروں کی پروازوں پر عارضی طور پر پابندی لگا دی تھی۔

Share With:
Rate This Article