12 April 2024

Homeتازہ ترینپائوں سے بدبو آنا کس بیماری کی علامت ہے؟

پائوں سے بدبو آنا کس بیماری کی علامت ہے؟

how to get rid of smelly feet permanently

پائوں سے بدبو آنا کس بیماری کی علامت ہے؟

لاہور:(ویب ڈیسک) پائوں سے بدبو آنا ایسا عمل ہے جس کا احساس بعض اوقات اس شخص کو نہیں ہوتا جس کے پیروں سے بو آرہی ہوتی ہے تاہم اس شخص کے آس پاس موجود لوگ سخت الجھن اور اذیت کا شکار ہوجاتے ہیں۔

اکثر لوگ جوتوں اور موزوں سے اٹھنے والی بدبو کے مسائل کا شکار ہوتے ہیں اور اسی وجہ سے اکثر انہیں بہت زیادہ شرمندگی کا سامنا بھی کرنا پڑتا ہے۔

پائوں کی بدبو کی سب سے بڑی وجہ پسینہ ہے جو بہتا نہیں، یعنی جب آپ جوتے پہنے ہوتے ہیں تو پسینہ پاؤں میں آتا ہے اور کافی دیر تک رہتا ہے اور اگر موزے پہنے ہوں تب صورتحال مزید بدتر ہوسکتی ہے۔

جب پسینہ بہت دیر تک موزوں اور پاؤں میں رہتا ہے تو یہ جراثیم پیدا کرتا ہے جس سے بدبو پیدا ہوتی ہے کیونکہ پسینہ اگر بہہ جائے تو بدبو کم ہو جاتی ہے مگر پائوں خونکہ بند ہوتے ہیں اور اگر جوتے پہنے ہوں تو جرابوں میں پسینہ جمع ہوکر بدبو پیدا کرتا ہے۔

مزید پڑھیں

پاکستان میں‌ کالی کھانسی کے پھیلائو کے خدشات


سائنسی تحقیق میں پاؤں سے بدبو آنے کی بیماری کو ’بروموڈوسس‘ کہا جاتا ہے، ایتھلیٹ یا وہ لوگ جن کے دن کا زیادہ تر وقت بند جوتے پہن کر گزرتا ہے ہے ان کے پاؤں میں فنگل انفیکشن ہونے کا تعلق بھی ’بروموڈوسس‘ سے ہی ہے۔

بدبو سے چھٹکارا

اگر آپ چاہتے ہیں کہ بروموڈوسس نامی اس بیماری سے چھٹکارا حاصل کرلیں تو اس کے لیے آپ کو پابندی سے کچھ طریقے کار اپنانے ہوں گے جن کے تحت یہ بیماری ختم ہوسکتی ہے۔

سب سے پہلے موزوں کو روزانہ تبدیل کریں، پیروں کی اچھی طرح سے صفائی رکھیں جس کیلئے نیم گرم پانی میں آدھا کپ ایپسم نمک ملا کر اس پانی میں پیر اس میں 20 منٹ تک رکھیں۔

پیروں کو خشک رکھیں کسی بھی گیلے پن یا اس کے علاوہ پسینے کو ختم کرنے کے لیے اپنے پیروں پر ٹیلکم پاؤڈر بھی لگا سکتے ہیں اور اپنے ناخنوں کو مستقل مزاجی سے تراشیں اور صاف ستھرا رکھیں۔

Share With:
Rate This Article