21 February 2024

Homeپاکستانسیاستسیاست باپ بیٹے کو آمنے سامنے لے آئی

سیاست باپ بیٹے کو آمنے سامنے لے آئی

سیاست باپ بیٹے کو آمنے سامنے لے آئی

سیاست باپ بیٹے کو آمنے سامنے لے آئی

اسلام آباد: (رپورٹ، سنو نیوز) خبریں ہیں کہ پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے اپنے والد آصف زرداری سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ آج گلے شکوے کرنے سے کیا فائدہ؟ شہبازشریف کو آپ نے وزیراعظم بنایا تھا۔

سنو نیوز ذرائع کے مطابق بلاول بھٹو نے آصف زرداری سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کی حقیقت آپ کو پانچ ماہ پہلے بتا دی تھی۔ تاہم بلاول کے سیاسی گلے شکووں پر آصف زرداری مسلسل مسکراتے رہے۔

تفصیل کے مطابق دو روزہ سی ای سی اجلاس میں کیا چلتا رہا؟ سنو نیوز نے اس کا پتہ لگالیا ہے۔ پیپلز پارٹی پی ڈی ایم حکومت کا حصہ بننے پر آج پشیمان ہے۔ آصف زرداری اور بلاول کے سیاسی لفظی واروں نے قیادت کو چونکا دیا ہے۔

سابق صدر آصف زرداری نے جواب دیا، یہ سب مل کر آج بھی پیپلزپارٹی کا کچھ نہیں بگاڑ سکتے۔ انہوں نے رجیم چینچ کا حصہ بننے کی اصل وجوہات قیادت کے سامنے بھی رکھ دی ہیں۔ ذرائع کے مطابق نئی سیاسی حکمت عملی مرتب کرنے کے لیے یوسف رضا گیلانی کی سربراہی میں کمیٹی بنائی جائے گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے عام انتخابات کیلئےکھل کر میدان میں نکلنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ اگلے ہفتے جلسے جلوسوں کا شیڈول ترتیب دیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں : پی پی پی اور ن لیگ نے ایک دوسرے کیخلاف محاذ سنبھال لیا

دوسری جانب ملک میں الیکشن سے پہلے سیاسی گرما گرمی تیز ہو گئی ہے ۔ کل کے حکومتی اتحادیوں نے ایک دوسرے کے خلاف محاذ سنبھال لیا ہے۔ پیپلز پارٹی رہنماؤں نے مسلم لیگ ن پر لفظی یلغار شروع کر دی ہے۔

ایک پریس کانفرنس کے دوران پیپلز پارٹی کے رہنما فیصل کریم کنڈی کا کہنا تھا کہ حالات خراب کرنےمیں جلدی نہیں کرنی چاہیے۔ بات نکلےگی توبہت دورتک جائےگی۔ پیپلزپارٹی نےکبھی بیساکھیوں کاسہارانہیں لیا۔

اس موقع پر ندیم افضل چن کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن انتخابات کاشیڈول دینےسےکیوں کترارہاہے؟ ایک جماعت ووٹ کوعزت دوکےنعرےسےبھاگ رہی ہے۔ سیاسی جماعتوں کواداروں کےپیچھے نہیں چھپناچاہیے۔

اس پریس کانفرنس کے بعد مسلم لیگ ن نے پیپلزپارٹی پر بھر پور جوابی وار کیا۔ ن لیگ کے رہنما حنیف عباسی نے کہا کہ پیپلزپارٹی کے پاس بھٹو زندہ ہے کے سوا پیش کرنے کےلیے کچھ نہیں ہے۔ پیپلزپارٹی والےکہتے ہیں بھٹو زندہ ہے، بھائی بھٹو مرچکا ہے۔

لیگی رہنما نے راولپنڈی میں نیوزکانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے کبھی نہیں کہا تھا کہ پیپلزپارٹی کے ساتھ مل کر الیکشن لڑیں گے۔ نوازشریف چوتھی مرتبہ پاکستان کے وزیراعظم بننے جا رہے ہیں۔ اکیس اکتوبرکو تاریخی استقبال کیا جائےگا۔

Share With:
Rate This Article