12 April 2024

Homeانٹرٹینمنٹماڈل نادیہ حسین کتنی بار ہراسانی کا شکار ہوئیں؟

ماڈل نادیہ حسین کتنی بار ہراسانی کا شکار ہوئیں؟

معروف ماڈل، میک اپ آرٹسٹ اور اداکارہ نادیہ حسین/ فائل فوٹو

ماڈل نادیہ حسین کتنی بار ہراسانی کا شکار ہوئیں؟

کراچی: (ویب ڈیسک) معروف ماڈل، میک اپ آرٹسٹ اور اداکارہ نادیہ حسین نے اپنے ساتھ ہونے والے خوفناک واقعات کا انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ جس ایک لڑکے نے مجھے ہراساں کیا، پولیس ان کے ساتھ ملی ہوئی تھی۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by Kuki Concepts (@kukiconceptsofficial)


پاکستان کی معروف ماڈل نادیہ حسین نے پوڈ کاسٹ میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میرے ساتھ ہراسانی کا پہلا واقعہ میری شادی سے قبل اس وقت ہوا جب میں ماڈلنگ انڈسٹری میں نئی آئی تھیں جب کہ دوسرا واقعہ شادی کے بعد پیش آیا۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by FWhy Podcast (@fwhyfrieha)


نادیہ حسین نے کہا کہ شادی سے قبل سی ویو میں میری رہائش گاہ تھی وہیں لینڈ کروزر پر سوار لڑکے نے میرا پیچھا کیا اور میں اس سے بچنے کے لیے گاڑی کو یہاں سے وہاں گھماتی رہی۔
میک اپ آرٹسٹ کا کہنا تھا کہ کافی دیر کے بعد بالآخر مجھے ایک جگہ پولیس کی موبائل نظر آگئی جہاں میں نے اپنی کار روک پولیس کو بتایا کہ گاڑی پر سوار لڑکا میرا پیچھا کر رہا ہے۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by FWhy Podcast (@fwhyfrieha)


نادیہ حسین نے دعویٰ کیا کہ میری شکایت پر جب پولیس والا لینڈ کروزر والے لڑکے کے پاس گیا تو اس کے ساتھ ہاتھ ملا کر انہیں ہاتھ جوڑنے لگا اور ان سے ہنس ہنس کر بات کرنے لگا۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by FWhy Podcast (@fwhyfrieha)


اداکارہ کا کہنا تھا کہ پولیس والے کا رویہ دیکھ کر میں مزید خوف زدہ ہوگئی اور وہاں سے گاڑی بھگا کر گھر آگئی لیکن لڑکا بھی میرے پیچھے پیچھے آگیا اور پھر وہاں میں نے اپنے نجی محافظوں کو قصہ بتایا جس کے بعد لڑکا کچھ دیر کے بعد بات کو سمجھ کر وہاں سے چلا گیا۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by DEAN Magazine ™ (@dean_magazine)


نادیہ حسین نے دوسرے واقعے سے متعلق بات کرتے ہوئے بتایا کہ دوسرا واقعہ شادی کے بعد ہوا تھا، میرے پیچھے ایک موٹر سائیکل سوار لڑکا پڑا اور مجھے کافی دیر تک گھورتا رہا۔


ان کا کہنا تھا کہ لڑکے نے مجھے گھورنے کی حد ہی کر دی، میرے قریب آکر فلائنگ بوسے دینے لگا اور گندے گندے اشارے بھی کرنے لگا، لڑکے کے مسلسل گھورنے اور گندے اشاروں کے بعد میرے صبر کا پیمانہ لبریز ہوگیا، موٹر سائیکل سوار کو کار کے دروازے سے دھکا دے کر اپنی جان چھڑائی اور وہاں سے فرار ہوگئی۔

Share With:
Rate This Article