12 April 2024

Homeپاکستانسرکاری ملازمین کے لئے بُری خبر

سرکاری ملازمین کے لئے بُری خبر

پنجاب حکومت/ فائل فوٹو

سرکاری ملازمین کے لئے بُری خبر

لاہور: (ویب ڈیسک) پنجاب حکومت نے دوران ملازمت وفات پانے والے سرکاری ملازمین کے لواحقین کو نوکری دینے کا قانون ختم کر دیا ہے۔

پنجاب حکومت کی جانب سے جاری ہونیوالے نوٹیفیکیشن کے مطابق دوران سروس وفات پانے والے افسران کی فیملی کی معاونت میں اضافہ کیا ہے۔ بی ایس 1 سے 11 تک کے سرکاری ملازمین کی وفات کے بعد لواحقین کو اب نوکری نہیں ملے گی۔

نوٹیفکیشن کے مطابق سکیل 1 تا 4 کے ملازم کی فیملی کو دوران ملازمت وفات پانے پر اب 50 لاکھ روپے مالی معاونت ملے گی جبکہ اسکیل 5 تا 10 کے ملازمین کی فیملی کو 75 لاکھ روپے ملیں گے۔
سکیل 11 تا 15 کے سرکاری ملازمین کے خاندان کو ایک کروڑ روپے اور سکیل 16 اور 17 کے ملازمین کی فیملی کو ڈیڑھ کروڑ روپے ملیں گے۔

جبکہ سکیل 18 تا 22 کے ملازمین کے خاندان کو 2 کروڑ روپے مالی معاونت کی مد میں ملیں گے۔

یہ بھی پڑھیں

پنجاب حکومت کا چنگچی رکشوں بارے بڑا فیصلہ

یاد رہے کچھ روز قبل بجلی کمپنیوں کے افسران کیلئے مفت بجلی کی سہولت ختم کر دی گئی۔ گریڈ 17 اور اس سے اوپر کے افسران کیلئے مفت بجلی یونٹس ختم کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا۔

نوٹیفکیشن کے مطابق گریڈ17 سے 21 کے افسران کو ماہانہ مفت یونٹس کی بجائے رقم ملے گی اور مفت بحلی کی سہولت ختم کرنے کا اطلاق یکم دسمبر 2023 سے ہوگا۔ نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ گریڈ 17 کے افسر کو مفت بحلی کے بجائے ماہانہ 15ہزار 858 روپے اور گریڈ 18 کے افسر کو ماہانہ 600 مفت یونٹس کے بجائے 21ہزار996 روپے ملیں گے۔

گریڈ 19کے افسر کو ماہانہ880 مفت یونٹس کے بجائے 37 ہزار 594 روپے ملیں گے، اس کے علاوہ گریڈ 20 کے افسر کو ماہانہ 1100 مفت یونٹس کے بجائے 46ہزار 992روپے دیےجائیں گے۔ نوٹی فکیشن کے مطابق گریڈ 21 کے افسر کو ماہانہ 1300 مفت یونٹس کے بجائے 55 ہزار 536 روپے ملیں گے۔

نوٹی فکیشن میں کہا گیا ہے کہ افسران کو اب متعلقہ بجلی کمپنیوں میں بجلی بل ادا کرنے ہوں گے۔

Share With:
Rate This Article