23 February 2024

HomeGazaحزب اللہ کا ایک اہم کمانڈر اسرائیلی فضائی حملے میں شہید

حزب اللہ کا ایک اہم کمانڈر اسرائیلی فضائی حملے میں شہید

Hezbollah Commander Killed by Israeli Airstrike in Southern Lebanon

حزب اللہ کا ایک اہم کمانڈر اسرائیلی فضائی حملے میں شہید

بیروت: (سنو نیوز) لبنان کی حزب اللہ تحریک نے اعتراف کیا ہے کہ رضوان فورسز نامی اسپیشل یونٹ کے ایک اہم کمانڈر وسام حسن تاول اسرائیلی حملے میں شہید ہو گئے ہیں۔

حزب اللہ نے اس بارے میں کچھ نہیں کہا ہے کہ وہ کیسے شہید ہوئے لیکن تین سیکیورٹی ذرائع نے اس سے قبل خبر رساں ادارے روئٹرز کو بتایا تھا کہ جنوبی لبنان میں اسرائیلی فضائی حملے میں ملک کی حزب اللہ تحریک کا ایک اہم کمانڈر مارا گیا ہے۔

لبنانی ذرائع نے بتایا کہ اس کمانڈر کا نام وسام حسن تاول ہے اور اسے حج جواد کے نام سے بھی جانا جاتا تھا۔ ان کا نام حزب اللہ کی ایک طاقتور فوجی بٹالین ‘رضوان فورسز’ کے کمانڈروں میں سے ایک تھا۔ حملہ ایک کار پر ہوا جس کی تصاویر بھی شائع کی گئی ہیں۔

اطلاعات کے مطابق حزب اللہ کے اس کمانڈر کی گاڑی کو لبنان کے جنوب میں واقع ایک چھوٹے سے قصبے ‘خربت سلام’ میں نشانہ بنایا گیا۔ اس سے قبل لبنان کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے بھی مقامی وقت کے مطابق صبح 10 بج کر 15 منٹ پر ایک کار پر اسرائیلی ڈرون کے حملے کی خبر دی تھی۔

غور طلب ہے کہ 7 اکتوبر کو اسرائیل کی جانب سے غزہ میں آپریشن کے آغاز کے بعد سے لبنان اور اسرائیل کے درمیان سرحدی جھڑپوں اور تشدد میں اضافہ ہوا ہے۔ اسرائیل نے یہ فوجی آپریشن حماس کے عسکریت پسندوں کے ملک پر اچانک حملے میں 1200 سے زائد افراد کی ہلاکت کے بعد شروع کیا تھا۔

غزہ میں حماس کے زیر کنٹرول وزارت صحت کا کہنا ہے کہ اسرائیلی آپریشن کے آغاز سے اب تک غزہ کی پٹی میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد 23 ہزار سے تجاوز کر گئی ہے۔ وزارت نے ایک بیان میں کہا کہ اس دوران تقریباً 59,000 افراد زخمی ہوئے۔

حزب اللہ کے اس اہم کمانڈر کی ہلاکت ایک ایسے وقت میں ہوئی ہے جب بیروت میں حماس کے ایک اہم رہنما صالح العروری کی ہلاکت سے خطے کے ممالک میں ایک مکمل جنگ کے پھیلنے کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔

اس سے قبل شام میں ایران کے پاسداران انقلاب کے ایک کمانڈر “رضی موسوی” یا “سید رازی” پر میزائل حملے نے خطے میں تنازعات اور تشدد میں اضافے کے حوالے سے تشویش پیدا کر دی تھی۔ رضی موسوی کو شام میں مزاحمتی محاذ کی حمایت کا ذمہ دار سمجھا جاتا ہے اور وہ لبنان کی حزب اللہ کے قریب سمجھے جاتے ہیں۔

حزب اللہ نے گذشتہ روز اعلان کیا تھا کہ اس نے “کامیاب کارروائیوں” کے سلسلے میں اسرائیل کے شمال میں ملک کے فوجی مقامات کو نشانہ بنایا ہے۔ اسرائیل نے یہ بھی کہا کہ انہوں نے رات کے وقت حزب اللہ کے مختلف اہداف پر حملہ کیا۔

Share With:
Rate This Article