23 February 2024

Homeتازہ ترینروزانہ ایک گلاس انار کا جوس پینے کے فائدے

روزانہ ایک گلاس انار کا جوس پینے کے فائدے

pomegranate juice

روزانہ ایک گلاس انار کا جوس پینے کے فائدے

لاہور: (ویب ڈیسک) انار کا نام سن کر آپ کے منہ میں پانی ضرور آجاتا ہے، یہ ایک ایسا پھل ہے جسے ہر عمر کے لوگ پسند کرتے ہیں لیکن کیا آپ اس کے فوائد کے بارے میں جانتے ہیں؟

انار ایک بہت ہی لذیذ پھل ہے، اور یہ بہت غذائیت سے بھرپور بھی ہے۔ یہ گول شکل میں آتا ہے اور اس کے چھوٹے چھوٹے دانے دیکھنے میں دلکش ہوتے ہیں۔ اس میں پولی فینول جیسے بھرپور اینٹی آکسیڈنٹس ہوتے ہیں جو صحت کے لیے فائدہ مند تصور کیے جاتے ہیں۔ اگر آپ روزانہ انار کا جوس پیتے ہیں تو یہ صحت کے لیے بہت فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے۔

دل کی صحت:

پاکستان میں دل کے مریضوں کی تعداد بہت زیادہ ہے، اس لیے انار کا جوس پینا بہت ضروری ہو جاتا ہے۔ یہ بلڈ پریشر کو کم کرتا ہے جس سے کولیسٹرول کی سطح بھی کم ہوتی ہے۔ اس کے علاوہ خون کی روانی بہتر ہونے سے دل کی صحت بہتر ہوتی ہے جس سے دل کے دورے کا خطرہ بھی کم ہوتا ہے۔

ہاضمہ بہتر ہوگا:

اگر آپ کو اکثر پیٹ کے مسائل رہتے ہیں تو انار کا جوس فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے، کیونکہ اس میں غذائی ریشہ وافر مقدار میں پایا جاتا ہے جو آنتوں کی حرکت کو بہتر بناتا ہے۔ جب ہاضمہ ٹھیک رہے گا تو آپ کو قبض، گیس اور بدہضمی جیسے مسائل سے نجات ملے گی۔

قوت مدافعت بڑھے گی:

انار کے جوس میں وٹامن سی وافر مقدار میں پایا جاتا ہے جو ہماری قوت مدافعت کو بہتر بناتا ہے۔ اگر جسم کی قوت مدافعت بڑھے گی تو ہم وائرل انفیکشن اور اس سے متعلق بیماریوں کا کم شکار ہوں گے۔ خاص طور پر بدلتے موسم میں، یہ بہت ہے۔

ذیابیطس میں فائدہ مند:

انار کا جوس ان لوگوں کے لیے بہت فائدہ مند ثابت ہو سکتا ہے جو ذیابیطس کے شکار ہیں، کیونکہ یہ انسولین کی حساسیت کو بہتر بناتا ہے اور خون میں شوگر کو کنٹرول کرنے میں بھی مدد کرتا ہے۔

کینسر کی روک تھام:

کئی مطالعات سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ انار کے جوس میں موجود اینٹی آکسیڈنٹس اور فائٹو کیمیکل کینسر کے خلیوں کی افزائش کو روکنے میں مدد دیتے ہیں۔ یہ خاص طور پر چھاتی کے کینسر اور پروسٹیٹ کینسر میں موثر سمجھا جاتا ہے۔

ڈس کلیمر: پیارے قارئین، ہماری خبریں پڑھنے کے لیے آپ کا شکریہ۔ یہ خبر صرف آپ کو آگاہ کرنے کے لیے لکھی گئی ہے۔ ہم نے اسے لکھنے میں گھریلو علاج اور عام معلومات کی مدد لی ہے۔ اگر آپ کہیں بھی اپنی صحت سے متعلق کچھ پڑھتے ہیں تو اسے اپنانے سے پہلے ڈاکٹر سے ضرور مشورہ کریں۔

Share With:
Rate This Article